طاہرالقادری اور چھانگا ما نگا

معزز قارئین
مرنے کا تو ایک دن مقررہے .مگر طاہرالقادری کے دھرنے کا کوئی وقت مقرر نہیں ہے .سردی ہو یا گرمی اس سے ان کو کوئی فرق نہیں پڑتا.جیسے ہی انہیں ہوش اآتا ہے .دھرنے کا اعلان کرد یتے ہیں.
جی ٹی روڈ پرقادری صاحب کا پتلی تماشہ شروع ہو چکا ہے ۔ جس میں اُن کا ساتھ پی ٹی آئی بھر پورطریقے سے دے رہی ہے ۔یعنی اس دھرنے میں عوامی تحریک کے ساتھ ساتھ پی ٹی آئی والے بھی بھر پور طریقے سے خوار ہوں گے ۔ شرکاء سےخطاب میں ان کا کہنا تھا کہ آپ لوگ تنہا نہیں، سانحہ ماڈل ٹاؤن کے متاثرین کوانصاف ملے گا، احتجاج کی تحریک ختم نہیں ہوگی۔ یعنی دیت جیسی چیز کی کوئی بات ہی نہیں.جس سے متاثرین کو کوئی فائدہ پہنچ سکے .بس ان کے جذبات ابھار کر ہر سال ان کو سڑ کوں پر لانا ہے .اسے کہتے ہیں پاکستان عوامی تحریک.
طاہرالقادری نےاپنے چھانگا ما نگا نکات پیش کیے.جس میں سوائے دیت کے ہر بات کی

انہوں نے کہا کہ شیخ رشید نے بھی کہا جب تک میں بیٹھوں گا وہ بھی بیٹھیں گے، جس وقت تک دھرنا رہے گا،آپ کے ساتھ رہوں گا۔

طاہرالقادری نے کہا کہ مظلوموں کے حقوق کے لیے لوگ جمع ہیں، دنیا کی کوئی طاقت آپ کو ڈرا نہیں سکتی، کوئی طاقت آپ کو انصاف سے دور نہیں کر سکتی۔

عوامی تحریک کے سربراہ نے کہا کہ آج مال روڈ پر بیٹھ کر ثابت کر دیا ہے کہ 17جون کےشہدا تنہا نہیں ہیں.

انہوں نے کہا کہ نواز شریف کہتے ہیں 70 سال سے تماشا لگا ہوا ہے جبکہ چھانگا مانگا سیاست انہوں نے ہی متعارف کروائی ہے

’نواز شریف صاحب 35 سال سے تو آپ نے تماشا لگایا ہوا ہے، نوازشریف نے صدر سے مل کر بے نظیر کی حکومت ختم کروائی۔‘

انہوں نے کہا کہ انصاف طلب کرنے والے پرامن ضرور ہیں لیکن امن ان کی کمزوری نہیں، نوازشریف کہتے ہیں ووٹ کا تقدس بحال کریں گے، پہلے بتائیں پامال کس نے کیا؟

طاہر القادری نے کہا کہ 35 سال سے آپ ملک میں برسر اقتدار ہیں، انقلاب کا نعرہ لگانے پر آپ کوشرم آنی چاہیے، آپ کا انقلاب تخت رائیونڈ بچاؤ انقلاب ہے۔

انہوں نے کہا کہ ماڈل ٹاؤن کیس میں شریف بردارن کو پھانسی ہوگی۔

انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ماڈل ٹاؤن سانحے کی رپورٹ کو منظر عام پر لایا جائے جبکہ جسٹس باقر نجفی نے جو کچھ بھی لکھا ہے وہ بتایا جائے۔

طاہر القادری نے کہا کہ جج صاحبان، وکلا،عوام سے پوچھتا ہوں 17 جون کو جو لاشیں گریں انکا قصور کیا تھا؟ وہ صرف یہی کہتے تھے کہ ہمارے بچوں کو تعلیم اور روزگار دیا جائے۔

عوامی تحریک کی عدالت کو دھرنا رات 10 بجے ختم کرنے کی یقین دہانی

پاکستان عوامی تحریک کی جانب سے مال روڈ پر دھرنا دیا جارہا ہے جس میں عوامی تحریک سمیت پی ٹی آئی کے رہنما بھی شریک ہیں۔
سانحہ ماڈل ٹاؤن شہدا کے لواحقین سے اظہار یکجہتی کے لئے تحریک انصاف کے رہنما فواد چوہدری، یاسمی راشد، محمود الرشید اور فردوس عاشق اعوان سمیت دیگر شریک ہیں جب کہ عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید بھی موجود ہیں۔

دھرنے کے مقام پر بڑے بڑے پینافلیکس اور بورڈز آویزاں کئے گئے ہیں جب کہ دھرنے میں سانحہ ماڈل ٹاؤن کے شہدا کے لواحقین اور پاکستان عوامی تحریک کے کارکنان شریک ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں