مبشر لقمان نے دوستی نبھا دی۔

گزشتہ دنوں مبشر لقمان نے اپنے پروگرام میں عائشہ گلا لئی کا انٹرویو کیا۔جو انٹرویوکم تھا ۔اوراِنوسٹی گیشن زیادہ تھی ۔بلکہ ایساکہنا مناسب ہوگا۔کہ انٹرویو کیا تھا۔صرف عمران خان کی وکالت تھی ۔عائشہ گلا لئی کو اس انٹرویوسے اُٹھ کر چلے جاناچاہیے تھا۔کیونکہ مبشر لقمان انٹرویو میں مسلسل عمران خان کی وکالت کرتا رہا۔ مبشر لقمان سے صرف اتناکہنا ہے کہ کہ اس طرح کے میسج سے گھبرا کر اگر خواتین گھر سے نکلناچھوڑ دیں ۔تو یاد رہیں کہ گھر بیٹھی خواتین کو بھی میسج آتے ہیں۔ تو کیاوہ پھردنیا چھوڑ دیں ۔
مبشر لقمان صاحب
ایسے میسجیز کی خواتین کی دنیا میں نہ کوئی اہمیت ہے اور نہ کوئی ویلیو۔خواتین کو ایسے میسجز کی زرا بھی پرواہ نہیں ہوتی ۔جیسا کہ عائشہ گلا لئی ۔۔۔جو اپنا کام ثابت قدمی سے کرتی رہی ۔۔
سوال یہ ہے کہ پھر عائشہ گلا لئی نے ایسا کیوں کیا۔اس کو آپ اللہ تعالیٰ کا عذاب کہہ سکتے ہیں ۔عمران خان کی دراز زبان کو روکنے کے لیے اللہ تعالیٰ نے عائشہ گلا لئی کی صورت میں میڈیا کے سامنے بیان دلوانا ہے ۔کیونکہ اللہ تعالیٰ جو چاہتا ہے وہ کرتا ہے ۔سنا ہے کہ اس بیان کے بعد عمران خان کی زبان کو بہت آرام ہے ۔ اور یہ بیان نوازفیملی کے لیے کسی گلوکوز ڈرپ سے کم نہیں۔اور اُن کو بھی کافی عرصے بعد سکون ملا ہے ۔اور اچھی نیند آنے لگی ہے….

اپنا تبصرہ بھیجیں