یہ سچے لوگوں کا المیہ ہے .کہ انہیں جھوٹ بولنا نہیں آتا.

میرا ضمیر میرا اعتبار بولتا ہے
میری زبان سے دیوانہ یار بولتا ہے
تیری زبان کترنا بہت ضروری ہے
تجھے مرض ہے کہ تو بار بار بولتا ہے
کچھ اور کام اسے آتا ہی نہیں شائد
مگر وہ جھوٹ بہت شاندار بولتا ہے

میں نےفیس بک پر یہ شعر پڑھے.یہ سچے لوگوں کا المیہ ہے .کہ انہیں جھوٹ بولنا نہیں آتا.

اپنا تبصرہ بھیجیں