لوگ چاندکو کیوں د یکھیں

میں تمھیں چاند کہوں یہ ممکن تو ہے مگر ۔ لوگ تمھیں رات بھر دیکھیں یہ مجھے گوارہ نہیں ۔ تشریح اس شعر میں شاعر اپنے دل میں چھپے خیال کے حد شات کے بارے میں کہتا ہے ۔ کہ اُسے محبوبہ کو چاند کہنے پر کوئی اعتراض نہیں۔مگر اسے رویت ہلا ل کمیٹی والوں مزید پڑھیں

اس کی سخاوت تو دیکھیں.

شمار اس کی سخاوت کا کیا کریں کہ وہ شخص۔۔۔۔ چراغ بانتا پھرتا ہے چھین کر آنکھیں۔۔۔۔۔۔ اختر شمار تشریح اس شعر میں شاعر کہتا ہے .کہ وہ جو چراغ بانٹتا پھرتا انسان تمھیں نظر آرہا ہے .یہ ایک نادان ڈاکٹر ہے جو لوگوں کی انکھوں کے غلط اپریشن کر کے بہت سے لوگوں کا مزید پڑھیں

پھول یونہی نہیں کھل جاتے ساگر

پھول یونہی نہیں کھل جاتے ساگر بیج کو دفن ہونا پڑتا ہے تشریح اس شعر میں شاعر کہتا ہے ۔کہ کسی کام کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لیے انسان کو محنت کرنا پڑتی ہے ۔خاک ہونا پڑتا ہے۔ بیج بننا پڑتا ہے ۔دنیا کی ایجادات جن سے آج ہم مستفید ہو رہے ہیں ۔وہ مزید پڑھیں

happy new year .2018

لوگ نۓ سال میں بہت کچھ نیا مانگیں گے لیکن مجھے وہی پرانا تمہارا ساتھ چاہیے اللہ کرے کہ تمام ممالک میں امن کا نیا سورج طلوع ہو کراچی کی طرح لاہور، اسلام آباد، کوئٹہ، پشاور اور ملک کے دیگر شہریوں میں آتش بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے شہریوں نے نئے سال کو خوش آمدید مزید پڑھیں

تمام کام اللہ تعالیٰ کی طرف جاتے ہیں.

أَفَمَنۡ هُوَ قَآٮِٕمٌ عَلَىٰ كُلِّ نَفۡسِۭ بِمَا كَسَبَتۡ‌ۗ وَجَعَلُواْ لِلَّهِ شُرَكَآءَ۔ تو کیا جو (اللہ) ہر متنفس کے اعمال کا نگراں (ونگہباں) ہے (وہ تمہارے معبودوں کی طرح بےعلم وبےخبر ہوسکتا ہے) اور ان لوگوں نے اللہ کے شریک مقرر کر رکھے ہیں۔ سورة الرعد ۳۳ يَعۡلَمُ مَا تَكۡسِبُ كُلُّ نَفۡسٍ۬‌ۗ۔ ہر متنفس جو کچھ مزید پڑھیں

میرا محبوب گرگٹ کو مات دے سکتا ہے.

بدلہ جو رنگ آپ نے حیرت ہوئی مجھے گرگٹ کو مات دے گی فطرت جناب کی تشریح اس شعر میں شاعر کہتا ہے ۔کہ میرا محبوب اتنا جلدی بدل جاتا ہے ۔اس کے لیے و ہ گرگٹ کی مثال دے رہا ہے ۔کہ رنگ بدلنے میں میں میرا محبوب گرگٹ کا مات دے دے گا۔

یہ سچے لوگوں کا المیہ ہے .کہ انہیں جھوٹ بولنا نہیں آتا.

میرا ضمیر میرا اعتبار بولتا ہے میری زبان سے دیوانہ یار بولتا ہے تیری زبان کترنا بہت ضروری ہے تجھے مرض ہے کہ تو بار بار بولتا ہے کچھ اور کام اسے آتا ہی نہیں شائد مگر وہ جھوٹ بہت شاندار بولتا ہے میں نےفیس بک پر یہ شعر پڑھے.یہ سچے لوگوں کا المیہ ہے مزید پڑھیں

رشتے محبت سے تھامے جاتے ہیں.

سخت ہاتھوں سے بھی چھوٹ جاتی ہیں انگلیاں رشتے طاقت سے نہیں محبت سے تھامے جاتے ہیں تشریح لوگوں سے ہمدردی اور پیا ر سے پیش آو.ورنہ محبت زبردستی نہیں کروائی جاسکتی .دل میں نفرت ہو تو ایسے رشتے جلد ٹوٹ جاتے ہیں.

میں تمھیں کبھی نظر انداز نہیں کروں گا.

ا نداز مجھے بھی آتے ہیں ۔نظرانداز کرنے کے بہت لیکن تو بھی تکلیف سے گزرے۔ یہ مجھے گوارہ نہیں ۔ تشریح اس شعر میں شاعر کہتا ہے کہ جب محبوب اُسے نظر انداز کرتا ہے ۔تو وہ ایسی کیفیات سے گزرتا ہے ۔جس کو الفاظ میں بیان نہیں کیا جاسکتا۔اس لیے وہ یہ رویہ مزید پڑھیں